کورونا وائرس:دنیا میں29لاکھ58ہزار سے زائد اموات

ہم نیوز  |  Apr 13, 2021

عالمی وبا کورونا وائرس کے سبب دنیا میں 13 کروڑ72لاکھ 52ہزار سے زائد افراد متاثر اور 29 لاکھ 58 ہزار 629افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔

دنیا بھر میں کورونا سے صحت یاب ہونے والوں کی تعداد 10 کروڑ 98 لاکھ سے زائد اور فعال کیسز کی تعداد 2 کروڑ 38 لاکھ سے زائد ہے۔

امریکہ میں کورونا سے مرنے والوں کی کل تعداد 5 لاکھ 75 ہزار 928 تک پہنچ گئی ہے جبکہ 3 کروڑ 19 لاکھ 18 ہزار سے زائد متاثر ہیں۔

برازیل میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ 34 لاکھ 82 ہزار سے زائد ہو گئی ہے اور 3 لاکھ 53 ہزار 293 افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: کورونا: ویکسین، بچوں پر ٹرائل روک دیا گیا

بھارت میں کورونا سے متاثرہ افراد کی تعداد ایک کروڑ 35 لاکھ 25 ہزار سے زائد ہے اور ایک لاکھ 70 ہزار 209 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔

فرانس میں 50 لاکھ 58 ہزار سے زائد افراد متاثر اور 98 ہزار 750 جان کی بازی ہار چکے ہیں۔

روس میں 46 لاکھ 41 ہزار سے زائد افراد کورونا وائرس سے متاثر ہو چکے ہیں اور اموات کی مجموعی تعداد ایک لاکھ 2 ہزار 986 ہے۔

برطانیہ میں 43 لاکھ 69 ہزار سے زائد افراد کورونا سے متاثر ہیں اور ایک لاکھ 27 ہزار 87 اموات ہوچکی ہیں۔

اٹلی میں 37 لاکھ 69 ہزار افراد متاثر ہیں جبکہ ایک لاکھ 14 ہزار 254 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ ترکی میں 38 لاکھ 49 ہزار سے زائد افراد متاثر اور 33 ہزار 939 اموات ہوئی ہیں۔

یہ بھی پڑھیں: سنگل ڈوز کورونا ویکسین لگوانے کے لیے عمر کی حد تبدیل

اعدادوشمار کے مطابق دنیا میں کورونا وائرس کے پہلے پانچ کروڑ کیسز 356 دنوں میں رپورٹ ہوئے تھے جب کہ آخری پانچ کروڑ کیسز صرف اناسی روز میں رجسٹرڈ ہوئے ہیں۔

کورونا وائرس کا پہلا کیس 17 نومبر 2019 کو رجسٹرڈ ہوا تھا جس کے بعد 27 جون 2020 کو کیسز کی تعداد ایک کروڑ ہوگئی تھی۔

24 نومبر کو کورونا کیسز کی تعداد چھ کروڑ ہوئی تھی، دس دسمبر 2020 کو کیسز سات کروڑ تک پہنچ گئے تھے، 25 دسمبر کو کیسز کی تعداد آٹھ کروڑ ہو گئی، 9 جنوری کو کیسز نے نو کروڑ کا ہندسہ عبورکرلیا تھا اور 25 جنوری کو کیسز دس کروڑ سے بڑھ گئے تھے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More