کورونا وائرس ، ہلاکتیں دو لاکھ سے تجاوز کرگئیں

بول نیوز  |  Apr 25, 2020

کورونا وائرس کی تباہ کاریوں میں خطرناک حد تک اضافہ ہوگیا ہے۔دنیا بھر میں کورونا وائرس سے ہونے والی اموات  2 لاکھ سے تجاوز کرگئی ہیں ۔

تفصیلات کے مطابق کورونا وائرس کی عالمی وباء دنیا کے 200 سے زائد ممالک میں پھیل چکی ہے جس میں 2،00،430   افراد ہلاک ہوچکے ہیں جبکہ متاثرہ افراد کی تعداد 28  لاکھ  32 ہزار سے تجاوز کر گئی  ہے۔

دوسری جانب اس وائرس کو شکست دے کر صحت یاب ہونے والے مریضوں کی تعداد 8  لاکھ 19  ہزار سے زائد ہوگئی ہے۔

اس مہلک وائرس کے سب سے زیادہ مصدقہ مریض امریکہ میں ہیں جہاں 9  لاکھ 29  ہزار سے زائد افراد متاثر ہیں جبکہ مرنے والوں کی تعداد 52  ہزار سے تجاوز کرگئی ہے۔

اسپین میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 2 لاکھ 23  ہزار سے تجاوز کرگئی  ہے جبکہ 22 ہزار  900 سے زائد افراد لقمہ اجل بن چکے ہیں۔

اٹلی میں 1 لاکھ 95   ہزار سے زائد افراد متاثر جبکہ 26   ہزار  300 سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔فرانس  میں مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 59  ہزار سے تجاوز کرگئی ہے جبکہ اموات  22    ہزار 200 سے تجاوز کر چکی ہیں۔

جرمنی میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 55   ہزار سے زائد جبکہ ہلاکتوں کی تعداد  5  ہزار 800 سے تجاوز کرگئی ہے۔ برطانیہ میں مریضوں کی تعداد ایک لاکھ 48   ہزار سے تجاوز کرگئی  ہےجبکہ 20    ہزار  300 سے زائد اموات ہوچکی ہیں۔

کورونا وائرس کا خاتمہ: امریکی ماہرین کا بڑا دعویٰترکی میں متاثرہ مریضوں کی تعداد 1 لاکھ 4 ہزار سے تجاوز کرگئی ہےجبکہ ہلاکتوں کی تعداد 2 ہزار 600 ہوگئی ہے۔

ایران میں مصدقہ مریضوں کی تعداد 89 ہزار سے تجاوز کرگئی ہے جبکہ اموات کی تعدا 5 ہزار 600 سے تجاوز کرگئی ہیں۔چین میں  متاثرہ مریضوں کی تعداد  82 ہزار 800 سے تجاوز کرگئی ہے جبکہ 4ہزار 600 سے زائد ہلاکتیں ہوچکی ہیں۔

روس میں 74 ہزار 500 سے زائد افراد متاثر جبکہ 600 سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔برازیل میں 54 ہزار سے زائد افراد متاثر ہیں جبکہ3 ہزار 700 سے زائد افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔

بیلجیم میں 45 ہزار  300 سے زائد مصدقہ مریض  ہیں جبکہ 6   ہزار  900 سے زائد اموات ہوچکی ہیں۔

کینیڈا میں 43 ہزار سے زائد مریض  ہیں جبکہ 2 ہزار  300 سے زائد اموات ہوچکی ہیں۔نیدرلینڈز میں 37 ہزار  سے زائد افراد متاثر جبکہ ہلاکتوں کی تعداد 4 ہزار  400 سے زائد ہو گئی ہے۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More