مانیٹری پالیسی کا اعلان،اسٹاک مارکیٹ میں معمولی مندی کارجحان

سماء نیوز  |  Jan 24, 2022

اسٹاک مارکیٹ 100 انڈیکس میں آج بروز پیر دوران ٹریڈنگ 200 سے زائد پوائنٹس کی کمی دیکھی گئی۔

پی ایس ایکس کی ویب سائٹ پر جاری اعداد و شمار کے مطابق کاروباری دن کے دوران 221 پوائنٹس کی کمی دیکھی گئی اور 11 بج کر 52 منٹ پر 100 انڈیکس 44 ہزار 797 پوائنٹس کی سطح پر ٹریڈ کررہا تھا۔

رپورٹ کے مطابق ورلڈ ٹیلی کارڈ لمیٹڈ کے شیئر کی قیمت 1.80 فیصد کمی سے 17.45 روپے اور ٹی آر جی پاکستان لمیٹڈ کی قیمت 3.96 فیصد کمی سے 81.54 روپے جبکہ ہم نیٹ ورک لمیٹڈ کی قیمت 1.04 فیصد اضافے سے 6.79 روپے ہوگئی ۔

ماہرین کے مطابق سرمایہ کار آج بروز پیر کو ہونے والی مانیٹری پالیسی میں شرح سود سے متعلق فیصلے کا انتظار کررہے ہیں کہ آیا اسٹیٹ بینک کی جانب سے شرح سود میں اضافہ کیا جاتا ہے یا نہیں، جس کے بعد انویسٹرز سرمایہ کاری سے متعلق کوئی فیصلہ کریں گے۔

کیا شرح سود میں اضافہ ہوگا؟

واضح رہے کہ رواں مالی سال کے پہلے ششماہی جولائی تا دسمبر کے دوران اسٹیٹ بینک کی جانب سے مانیٹری پالیسی سخت رکھنے کی پالیسی رکھی گئی جس کے نتیجے میں شرح سود میں 275 بیسس پوائنٹس یعنی 2.75 فیصد اضافہ کیا گیا اور شرح سود 9.75فیصد کی سطح پر موجود ہے۔

ٹاپ لائن سیکورٹیز کی جانب سے اس حوالے سے ایک سروے کیا گیا ہے جس میں مالیاتی شعبے سے منسلک 84  افرد نے حصہ لیا۔ سروے نتائج کے مطابق 60فیصد سروے شرکاء کا خیال ہے کہ شرح سود میں کوئی تبدیلی نہیں ہوگی اور 9.75فیصد کی شرح برقرار رکھی جائے گی جب کہ 40فیصد کے مطابق شرح سود مزید بڑھایا جائے گا جس میں 18فیصد شرکاء 25بیسس پوائنٹس اضافے کا خیال ظاہر کررہے ہیں جب کہ 12فیصد شرکاء کے مطابق 50بیسس پوائنٹس کا اضافہ ہوگا۔

مزید خبریں

Disclaimer: Urduwire.com is only the source of Urdu Meta News (type of Google News) and display news on “as it is” based from leading Urdu news web based sources. If you are a general user or webmaster, and want to know how it works? Read More